پاکستان میں کامیاب تنظیم سازی: کوکاکولا باٹلنگ پلانٹ پر 75 نئی مستقل ملازمتیں، پہلی بار یونین دفاتر کا افتتاح

پاکستان میں 8- 2010کوکاکولا پلانٹوں پر کامیاب تنظیم سازی می مہم کے نتیجے میں کو کا کولا ورکرز کی یونینوں نے گذشتہ سال جو لائی میں اجتماعی معاھدات کرنے کے بعد ملک بھر میں عارضی ورکرز کو مستقل کرانے کا سلسلہ شروع کر دیاھے۔ کوکاکولا باٹلنگ پلانٹ فیصل آباد پر 10 اگست کو 45 ورکرز نے مستقلی کے خطوط حاصل کیے، یہ ملازمین عرصہ دراز سے ٹھکیداری نظام کے تحت کام کر رھے تھے جنہیں کسی بھی قسم کی قانونی سہولیات حاصل نہیں تھیں۔ اس کے محض دس دنوں بعدہی 20 اگست کو کوکا کولا رحیم یار خان میں 30 ورکرز کو مستقل ھونے کے خطوط جاری کیے گئے۔ان یونینز نے یہ مستقل پوزیشنز جولائی میں قومی سطح کی گفت و شنید میں مشترکہ سوداکاری کے ذریعے سے حاصل کیں۔ مستقل ھونے کے بعد ان ورکرز کی زندگی کا ایک رخ تبدیل ھوا ھے ، ان ورکرز نے یونین میں شمولیت اختیار کر لی ھے اور اب یہ ٹریڈ یونین کے حقوق اور مشترکہ سوداکاری کے فوائد سے بہرہ مند ھونگے۔
کوکاکولا یونین فیصل آباد میں اس اھم کامیابی کو منانے کے لئے ایک تقریب بھی منعقد کی ، یہ یونینز آئی یو ایف سے ملحقہ نیشنل فیڈریشن آف فوڈ،بیوریجز اینڈ ٹوبیکو ورکرز کی حمایت سے تشکیل پائیں ۔ یونین نے کوکاکولا کراچی پلانٹ کی یونین کی مثال کو مدنظر رکھتے ھوئے چندہ ایک فیصد کر دیا ھے ، کوکاکولا کراچی یونین نے 2008 کو یونین کا چندہ ایک فیصد کیا تھا۔
اسی سوداکاری کے معاہدے نے گوجرانوالہ ، لاھور ، اور فیصل آباد پلانٹوں پر یونین کے حقوق کو تحفظ دیا اور اسی معاہدے میں یونین کے دفتر کے قیام کے لئے کرایہ کی سبسڈی کو بھی شامل کیا گیا۔ کوکا کولا لاھور کے مرکزی دفتر اگست کا افتتاح 13 اگست جبکہ اس سے اگلے دن 14 اگست کو کوکا کولا فیصل آباد میں یونین کے دفترکا افتتاح ھوا۔

Choose your language: